عضب خدا کا ۔۔!! سندھ میں لاک ڈاؤن کے دوران سب سے پہلی چھوٹ کس ادارے کو دے دی گئی؟ کامران خان پھٹ پڑے، پیپلز پارٹی کی ’عجب کرپشن کی غضب کہانی‘ بیان کر دیا

اسلام آباد( نیوز ڈیسک ) سینئر اینکر پرسن کامران خان کا کہنا ہے کہ سندھ حکومت نے سب سے پہلے چھوٹ چھوٹے طبقے کے کاروباری افراد کو دینے کی بجائے سرکار رجسٹرار آفس کھول دیئے جہاں پر صرف رشوت کو عوض کام ہوتا ہے ۔ تفصیلات کے مطابق سماجی رابطوں کی ویب سائٹ

ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں سینئر اینکر پرسن کامران خان کا کہنا تھاکہ ‘‘غضب خدا کا حکومت سندھ نے لاک ڈاؤن میں سب سے پہلی چھوٹ غریبوں کے روزگار کو نہیں دی سب سے پہلے رشوت کے چھاپے خانوں یعنی Properties رجسٹر یشن کے سرکاری رجسٹرار آفس کھول دئے بلاول جائیں دکھیں ایک شخص بھی نہیں جو ہزاروں لاکھوں کی رشوت کے بغیر اپنا کام کروا سکتا ہو، سب سے پہلے رشوت!’’

انہوں نے مزید کہا کہ ’’پاکستان ہی نہیں دنیا کے طاقتور ترین ملک بھی مکمل لاک ڈاؤن کے بوجھ سے ڈھیر ہوگئے اب کاروبار دکانیں دفاتر کھول رہے ہیں سب سے بڑی مثال امریکہ کی ہے جہاں 12 لاکھ کورونا کیسز اور تقریباً 67000 کورونا اموات نے اس کے وجود کو دہلا دیا مگر پھر بھی پیر سے تقریباً آدھا امریکہ کھل جائے گا‘‘۔

Sharing is caring!

Comments are closed.