یہ ہے پاکستان میں انصاف کا معیار۔۔!! ملک ریاض حسین کی دونوں بیٹیوں کو راتوں رات کہاں منتقل کر دیا گیا؟ تفصیلات سامنے آتے ہی پاکستانی اپنا سر پیٹ اُٹھے

اسلام آباد( نیوز ڈیسک) کیا ملک ریاض حسین کی بیٹیاں لندن روانہ ہوگئیں؟ معروف صحافی کا دعویٰ، عظمیٰ خان کے وکیل حسان نیاز ی نے پاکستانی سسٹم پر تنقید کے نشتر چلا دیئے۔تفصیلات کے مطابق احتشام الحق نامی معروف صحافی نے اپنے ٹویٹ میں دعویٰ کیا کہ ’’لندن میں مقیم صحافی کے مطابق ملک ریاض کی

دو بیٹیاں چارٹر فلائٹ کے زریعے لندن پہنچ گئیں”۔

احتشام الحق کے اس ٹویٹ کے بعد وزیر اعظم عمران خان کے بھانے، سینئر صحافی حفیظ اللہ نیازی کے صاحبزادے اور عظمیٰ خان کے وکیل حسان خان نیازی کا کہنا ہے کہ ’’ اس سسٹم پر ، پولیس پر اور ان لوگوں پر لعنت ہے جو عظمیٰ خان کی کردارکشی کررہے ہیں۔ اگر یہ سچ ہے تو پنجاب پولیس پاکستان کی سب سے بیوقوف پولیس فورس ہے‘‘۔

ایک اور ٹویٹ میں حسان خان نیازی کا کہنا تھا کہ ’’ اگر فلائنٹس بند ہیں تو ملک ریاض کی بیٹیاں امبرملک اور پشمینہ ملک کیسے ملک سے باہر چلی گئیں؟ کیا اسکی وجہ یہ ہے کہ عظمیٰ خان کا بیک گراؤنڈ بہت غریب ہے ؟ کیا اس کا مطلب یہ ہے کہ گارڈز اسے جنسی طور پر ہراساں کرسکتے ہیں اور شیشے کے ٹکڑوں پر چلنے کا کہہ سکتے ہیں؟‘‘۔

ابھی تک اس بات کی تصدیق نہیں ہوسکی کہ ملک ریاض کی بیٹیاں لندن چلی گئی ہیں یا پاکستان میں کیونکہ ایک تو پاکستان سے لندن فلائٹس بند ہیں اور دوسرا چارٹرڈ طیارے پر جانے کیلئے بھی وفاقی حکومت کی کلئیرنس درکار ہے۔ لیکن سوشل میڈیا پر #ArrestAmberMalik ٹاپ ٹرینڈ بن گیا کیونکہ ملک ریاض کی بیٹی امبر ملک اور انکے ساتھ آئے گارڈز نے ہی اداکارہ عظمیٰ خان کے گھر پر توڑپھوڑ اور مارپیٹ کی تھی۔سوشل میڈیا صارفین نے مطالبہ کیا کہ اگر عنبر ملک لندن نہیں گئی تو اسے گرفتار کریں پھر یقین آئے گا کہ وہ پاکستان میں ہی ہے۔۔سوشل میڈیا صارفین کہنا تھا کہ اگر اس ملک کا قانون ملک ریاض سے زیادہ طاقتور ہے تو عنبرملک کو گرفتار کرکے دکھائیں ۔۔ سوشل میڈیا صارفین کا مزید کہنا تھا کہ اگر عمران خان “دو نہیں ایک پاکستان” کے نعرے پر یقین رکھتے ہیں ، ریاست مدینہ کی بات کرتے ہیں تو عنبر ملک کو گرفتار کرکے دکھائیں۔

Sharing is caring!

Comments are closed.