پاکستان میں 10اگست کا دِن خطرناک قرار۔۔!! 1 ہی دن میں79ہزار تک ریکارڈ اموات ہو سکتی ہیں، امپیریل کالج لندن نے خوفناک تحقیقاتی رپورٹ جاری کر دی

لاہور (نیوز ڈیسک ) پاکستان میں لاک ڈاؤن نہ لگایا گیا تو 10 اگست کو 79 ہزار ریکارڈ اموات ہوں گی، امپیریل کالج لندن کی تحقیق ہے کہ اگر پاکستان میں27 فروری تا 11 جولائی تک 135 دنوں کیلئے لاک ڈاؤن کیا گیا تو4 اگست کو پیک ڈے ہوگا، جب ایک دن میں1 کروڑ 35 لاکھ 70 ہزار افراد کورونا کا شکار ہوں گے۔

تفصیلات کے مطابق امپیریل کالج لندن نے برطانوی حکومت کے مالی تعاون سے امریکا اور برطانیہ کے علاوہ مختلف ممالک میں لاک ڈاؤن کے دوران اور بغیر لاک ڈاؤن کورونا وائرس کے پھیلاؤ اور جانی نقصان سے متعلق ایک سٹڈی کی ہے، جس میں امپیریل کالج لندن نے پاکستان میں کورونا وائرس کی صورتحال سے متعلق بتایا ہے کہ اگر پاکستان میں 27 فروری سے11 جولائی تک 135 دنوں کیلئے لاک ڈاؤن کیا گیا تو پاکستان میں 4 اگست کورونا وائرس کا پیک ڈے تصور کیا جائے گا۔ خیال رہے کہ کورونا وائرس نے گزشتہ چوبیس گھنٹوں میں مزید 97افراد کی جان لے لی جبکہ 5,248 نئے کیسز سامنے آگئے ہیں۔ حکومتی اعدادوشمار کے مطابق اس وقت تک ملک بھر میں مجموعی طور پر2,729افراد جاں بحق ہوچکے ہیں جبکہ کیسز کی مجموعی تعداد144,478گزشتہ 24گھنٹوں کے دوران 1986 افراد صحتیاب بھی ہوئے ہیں جس کے صحت مند ہونے والوں کی مجموعی تعداد 53,721ہوگئی ہے جبکہ ملک بھر میں ایکٹو کیسز کی تعداد 88,028ہے۔گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران ملک بھرمیں 29,085افراد کے ٹیسٹ کیے گئے جن میں سے 5,248کا نتیجہ مثبت نکلا۔ سرکاری اعداد وشمار کے مطابق24گھنٹوں میں مزید 97افراد لقمہ اجل بنے جبکہ 1,986نے کورونا وائرس کو شکست دے دی۔54,138کیسز کے ساتھ پنجاب اس وقت کورونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثرہ صوبہ ہے، پنجاب میں اموات بھی ایک ہزار سے تجاوز کرچکی ہیں اور اب تک 1,031افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں، پنجاب میں صحتیاب ہونے والوں کی تعداد17,710جبکہ ایکٹو کیسز کی تعداد35,397ہے۔سندھ میں کورونا وائرس کے مریضوں کی مجموعی تعداد53,805 ہے، 25,606مریض صحتیاب ہوچکے ہیں جبکہ ایکٹو کیسز کی تعداد27,368ہے، سندھ میں اس موذی وائرس کا شکار ہوکر 831جاں بحق ہوئے ہیں۔اسی طرح خیبر پختونخوا میں کیسز کی مجموعی تعداد 18,013ہوچکی ہے جن میں سے 4,539صحتیا ب ہوچکے ہیں جبکہ کے پی کے میں اموات 675ہوچکی ہیں۔بلوچستان میں کورونا سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد8,177،صحتیاب ہونے والوں کی تعداد2,859،ایکٹوکیسز 5,233جبکہ اموات 85 بتائی جاتی ہیں۔اسلام آباد کی بات کریں تووہاں 8,569کیسز کی اب تک تصدیق ہوچکی ہے جن میں سے 2,037صحتیاب ہوچکے، 6,454ایکٹو کیسز ہیں جبکہ78قیمتی جانیں ضائع ہوچکی ہیں۔اسی طرح آزاد کشمیر میں کورونا سے متاثرہ افراد کی تعداد647ہوگئی ہے جن میں سے 254صحتیاب ہوئے ، ایکٹو کیسز 380جبکہ اموات 13 ہیں۔گلگت بلتستان میں کورونا سے متاثرہ افراد کی تعداد 1,129ایکٹوکیسز ،397، اموات16 جبکہ صحتیاب ہونے والوں کی تعداد716 ہے

Sharing is caring!

One response to “پاکستان میں 10اگست کا دِن خطرناک قرار۔۔!! 1 ہی دن میں79ہزار تک ریکارڈ اموات ہو سکتی ہیں، امپیریل کالج لندن نے خوفناک تحقیقاتی رپورٹ جاری کر دی”

  1. Shamshad Hussain says:

    Scientific community men aek mahawara mash-hoor he k , jhoot aor us se bara safed jhoot aor sab se bara statistic kehlata he.
    Aor aaj k zamane men sab se bara hathyar media he jo nadano k hath men khud k leye raja Porus k hathi ka kirdar ada kerta he.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *