کُرسی جاتی ہے تو جائے۔۔!! وزیر اعظم عمران خان نے مافیاز کے خلاف طبلِ جنگ بجا دیا، کرپٹ عناصر کے خلاف بڑے اقدام کی اطلاعات

اسلام آباد ( نیوز ڈیسک )وزیر اعظم عمران خان نے ایک بار پھر دو ٹوک الفاظ میں کہا ہے کہ کرپٹ عناصر نے ملک کو نقصان پہنچایا ہے ان کے ساتھ کسی قسم کا کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے ،مجھے کرسی کی کوئی پرواہ نہیں یہ جاتی ہے تو چلی جائے لیکن مافیا کا آخری حد تک پیچھا کروں گا۔ ان خیالات کا اظہار وزیر اعظم نے پارلیمنٹ

ہائوس میں اپنے چیمبر میں کراچی اور پنجاب میں پارٹی اراکین اسمبلی سے ملاقات کے دوران کہی۔ذرائع نے بتایا کہ وزیر اعظم عمران خان سے پنجاب اور کراچی سے تعلق رکھنے والے تحریک انصاف قومی اسمبلی نے ملاقات کی جن میں سیف الرحمان، محمد عالمگیر خان، آفتاب حسین صدیقی، عبدالشکور شاد، فہیم خان، عطااللہ، آفتاب جہانگیر، محمد اسلم، جمیل احمد خان، محمد اکرم، غزالہ سیفی اور صائمہ ندیم شامل تھے اس موقع پر وفاقی وزراء اسد عمر اور سید علی زیدی ،وزیر دفاع پرویز خٹک اور چیف وہپ عامر ڈوگر بھی موجود تھے ، وزیر اعظم نے پارٹی ارکان کو حکومتی امور ،پارٹی کو فعال بنانے اور دیگر قومی امور پر بات چیت کی جبکہ حلقوں میں ترقیاتی منصوبوں ،عوامی مسائل، پارٹی امور پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا ،ارکان نے اپنے حلقوں کے مسائل، مہنگائی اور پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے پر عوامی ردعمل سے وزیر اعظم کو آگاہ کیا ۔وزیر اعظم عمران خان نے پارٹی اراکین کو فنڈز کی فراہمی کی یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ حکومت مستحکم ہے،ملک کو معاشی اور سیاسی لحاظ سے طاقتور بنائیں گے،انہوں نے ایک بار پھر دو ٹوک الفاظ میں کہا کہ کرپٹ عناصر نے ملک کو نقصان پہنچایاکسی صورت ان سے سمجھوتہ نہیں کروںگا ،مجھے کبھی بھی اپنی کرسی کی فکر نہیں رہی ،یہ جاتی ہے تو چلی جائے ،یہ آج ہے کل نہیں ہوگی لیکن اپنے نظریے سے کسی صورت پیچھے نہیں ہٹوں گا اور ملک لوٹنے والے مافیا کا آخری حد تک پیچھا کروں گا ۔وزیر اعظم نے پارٹی اراکین اسمبلی کو ہدایت کی کہ اپنے اپنے حلقوں میں عوام کو اصل حقائق سے آگاہ رکھیں،ملکی مسائل پر جلد قابو پالیں گے ہم بالکل درست سمت میں جارہے ہیں ،قوموں پر مشکل وقت آتے رہتے ہیں ،اس وقت ہم مختلف چیلنجز سے گزررہے ہیں اور ان چیلنجز سے نمٹنے کیلئے ہر طرح کیلئے تیارہوں۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *