شائننگ انڈیا اِن ٹربل۔!! بھارت میں ہزار دو ہزار نہیں بلکہ 4 ہزار جعلی پائلٹ نکل آئے، تحقیقات کا آغاز کر دیا گیا

ممبئی (ویب ڈیسک) معروف ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق پاکستان میں جعلی پائلٹ کی خبریں تو آ ہی رہی تھیں اب خبر آئی ہے کہ انڈیا میں پاکستان سے بھی زیادہ جعلی پائلٹ ہیں۔ انڈیگو ایئر لائن کی معطل پائلٹ پرمندر کور گلٹی کو پائلٹ کا لائسنس حاصل کرنے کے لئے

اس کی مارک شیٹ جعلی ہونے کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا اس کے کچھ ہی دن بعد ، اسی بنیاد پر ایک اور گرفتاری عمل میں لائی گئی ہے۔ اس بار ، بھارت کی قومی ایئر لائن ایئر انڈیا کے پائلٹ کیپٹن جے کے ورما کو گرفتار کیا گیا ہے۔ ایک سینئر پولیس عہدیدار کا کہنا تھا کہ ہم نے ورما کو گرفتار کرلیا ہے۔ تفتیش جاری ہے۔ ہمیں ڈائریکٹوریٹ جنرل سول ایوی ایشن (ڈی جی سی اے) نے مزید نام فراہم کیے ہیں۔ انڈیگو کے میناکشی سہگل اور ایم ڈی ایل آر کے سورن سنگھ تلوار یہ سب دو مہینے پہلے پرمندر کور گلاٹی کو لینڈنگ کے اصولوں کی خلاف ورزی کرنے کے الزام میں تحقیق کے بعد سب سامنے آئے ،اس کے بعد معاملہ ایوی ایشن واچ ڈاگ ، ڈی جی سی اے کو بتایا گیا۔ ایئر لائن واچ ڈاگ نے اعتراف کیا کہ بھارت میں 4000 پائلٹ لائسنس کی تحقیقات کی جا رہی ہے۔ بھارت کے سکریٹری ہوا بازی کے سکریٹری نسیم زیدی کا کہنا ہے کہ جعلی پائلٹ کے حوالہ سے ڈی جی سی اے کے ذریعہ 3،000 سے 4،000 پائلٹوں کے لائسنسوں کی تحقیقات کی جارہی ہے۔ بھارت میں پائلٹ کا لائسنس حاصل کرنے کے لئے ، پائلٹ کو تین مضامین پاس کرنا ہوتے ہیں، لیکن پائلت گلاٹی کے معاملے میں ، ڈی جی سی اے کی تحقیقات سے پتہ چلتا ہے کہ وہ دو کاغذات کلیئر نہیں کرسکتی ہیں ، لہذا اس نے مبینہ طور پر جعلی لائسنس بنوایا۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *