Breaking News
Home / دلچسپ و عجیب / اداکارہ سجل علی ڈرامے کی ایک قسط میں کام کرنے کے کتنے پیسے لیتی ہیں ؟ دنگ کر ڈالنے والے حقائق

اداکارہ سجل علی ڈرامے کی ایک قسط میں کام کرنے کے کتنے پیسے لیتی ہیں ؟ دنگ کر ڈالنے والے حقائق

لاہور(ویب ڈیسک)بولی وڈ اور ہولی وڈ کے سب سے زیادہ معاوضہ لینے والے فنکاروں کی فہرست ہر سال جاری ہوتی ہے مگراب ایک ویب سائٹ نے اپنی ایک رپورٹ میں 7اداکاراؤں کی ایک فہرست بیان کی ہے جو 2020ءمیں سب سے زیادہ معاوضہ لیتی رہیں۔ ان میں عائشہ خان کا نام بھی شامل ہے جو

اب اداکاری چھوڑ چکی ہیں۔ 37سالہ عائشہ خان انڈسٹری چھوڑنے سے قبل ڈرامے کی ایک قسط کے اڑھائی لاکھ روپے لیتی تھیں۔آمنہ شیخ پاکستان کی گلیمرس سپرماڈل اور اداکارہ ہیں جو ڈرامے کی ایک قسط کے 4لاکھ روپے وصول کرتی ہیں۔ 38سالہ آمنہ شیخ نے بارش میں دیوار نامی ڈرامے سے اداکاری میں قدم رکھا اور اب وہ مقبول ترین اداکاراؤں میں سے ایک ہیں۔ 26سالہ سجل علی بھی اس فہرست میں شامل ہیں جو ایک قسط کے ساڑھے 6لاکھ روپے لیتی ہیں۔ آئزہ خان ایک قسط کے ساڑھے 6لاکھ روپے، صباءقمرایک قسط کے 8لاکھ روپے، ماہرہ خان ایک قسط کے ساڑھے 8لاکھ روپے اور 37سالہ مہوش حیات ایک قسط کے 8لاکھ روپے لیتی ہیں۔ دوسری جانب گزشتہ سال شوبز انڈسٹری کو خیرباد کہنے والی رابی پیزادہ نے پاکستان چھوڑنے کا فیصلہ واپس لیتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان میرا دل اور میری جان ہے، یہاں کے لوگ مجھے بہت عزیز ہیں اور اگر میں کبھی پاکستان چھوڑ کرگئی بھی تو مکّہ جاؤں گی۔ حال ہی میں رابی پیرزادہ نے مائیکرو بلاگنگ سائٹ ٹوئٹر پر ایک اپنی پینٹنگ کی تصویر شیئر کی تھی جس پر گلوکار عدنان سمیع نے اُنہیں خوب سراہا تھا جبکہ کچھ پاکستانی صارفین نے رابی پیرزادہ پر تنقید کی تھی اور کہا تھا کہ یہ پینٹنگ آپ نے خود نہیں بنائی ہے۔ عدنان سمیع کے تعریفی ٹوئٹ کے بعد رابی پیرزادہ نے جذبات میں آکر ٹوئٹ کیا تھا جس میں اُنہوں نے کہا تھا کہ’لوگوں کے پاکستان چھوڑ کر چلے جانے کی وجہ یہ ہے کہ بھارت ہم سے کافی بہتر ہے، وہاں کے لوگوں نے کبھی مجھ پر طنز نہیں کیا اور نہ ہی مجھے تنقید کا نشانہ بنایا۔‘

Share

About admin

Check Also

وزیر کو کتوں کے آگے پھینگ دیا جائے

کسی زمانے میں ایک بادشاہ تھا جس نے دس جنگلی کتے پالے ہوئے تھے, اس …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

shares

Powered by themekiller.com