Breaking News
Home / دلچسپ و عجیب / میں گاندھی کی عینک پھینک دینا چاہتا تھاکیونکہ یہ مجھے کوئی فائدہ نہیں دیرہی تھی لیکن جب نیلامی کی گئی تو اس کی قیمت کیا لگی؟حیرت کے جھٹکے کے لیے تیار ہو جائیں

میں گاندھی کی عینک پھینک دینا چاہتا تھاکیونکہ یہ مجھے کوئی فائدہ نہیں دیرہی تھی لیکن جب نیلامی کی گئی تو اس کی قیمت کیا لگی؟حیرت کے جھٹکے کے لیے تیار ہو جائیں

لندن (ویب ڈیسک )برطانیہ کے شہر برسٹل کی ایک نیلامی ایجنسی نے انڈیا کے بانی موہنداس کرم چند گاندھی کی عینک کو دو لاکھ 60 ہزار پانڈ ( ڈھائی کروڑ انڈین روپے) سے زیادہ میں نیلام کیا ہے۔اس عینک کو امریکہ کے ایک کلکٹر عنی نوادرات جمع کرنے کے شوقین نے نیلامی شروع ہونے کے چھ منٹ کے اندر ہی خرید لیا۔

میڈیارپورٹس کے مطابق نیلامی ایجنسی ایسٹ برسٹل کا کہنا تھاکہ انھیں تین اگست کو یہ عینک ایک سادہ لفافے میں ان کے لیٹر باکس میں ملی تھی جہاں کسی شخص نے اسے چھوڑ دیا تھا۔اس وقت ایجنسی کی جانب سے اشیا نیلام کرنے والے اینڈریو سٹو نے یہ توقع ظاہر کی تھی کہ اس عینک کی قیمت تقریبا 15 لاکھ روپے ہو گی اور یہ کمپنی کی تاریخ کی سب سے اہم نیلامی ہو گی۔اس عینک کے مالک ایک معمر شخص ہیں اور مینگاٹس فیلڈ کے رہائشی ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ وہ نیلامی سے حاصل ہونے والی رقم اپنی بیٹی کے ساتھ شیئر کریں گے۔کہا جاتا ہے کہ گاندھی کو یہ عینک ان کے چچا نے اس وقت دی تھی جب وہ جنوبی افریقہ میں کام کر رہے تھے۔ یہ دور سنہ 1910 اور 1920 کے درمیان کا ہو سکتا ہے۔ عینک کی نیلامی کرنے والے ایسٹ برسٹل آکشن کے اینڈریو سٹو نے کہاکہ تقریبا 50 سالوں سے یہ عینک کسی الماری میں بند پڑی رہی ہے۔ نیلام کرنے والے شخص نے ایک بار مجھے بتایا تھا کہ وہ اسے پھینک دینا چاہتے ہیں کیونکہ انھیں اس سے کوئی فائدہ نہیں ہو رہا تھا۔ اب انھیں اس کے لیے اتنی بڑی رقم مل گئی ہے جس سے ان کی زندگی بدل جائے گی۔یہ نیلامی عینک کے معمر مالک کے لیے اچھی چیز ہے۔ شاید اس لیے کہ وہ مشکل وقت سے گزر رہے ہیں اور اس رقم سے ان کی بہت مدد ہو گی۔ شاید اس لیے کہ وہ مشکل وقت سے گزر رہے ہیں اور اس رقم سے ان کی بہت مدد ہو گی۔

Share

About admin

Check Also

وزیر کو کتوں کے آگے پھینگ دیا جائے

کسی زمانے میں ایک بادشاہ تھا جس نے دس جنگلی کتے پالے ہوئے تھے, اس …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

shares

Powered by themekiller.com