Home / Other / مسلسل 8 دن سے دلہے کا لباس پہن کر سو رہا ہوں کیونکہ ۔۔شدیدکنوارے پن کاشکارلڑکے کاایسااقدام کہ ہرکوئی حیران رہ گیا

مسلسل 8 دن سے دلہے کا لباس پہن کر سو رہا ہوں کیونکہ ۔۔شدیدکنوارے پن کاشکارلڑکے کاایسااقدام کہ ہرکوئی حیران رہ گیا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) مسلسل 8 دن سے دلہے کا لباس پہن کر سو رہا ہوں کیونکہ ۔۔ ایک ایسے لڑکے کی کہانی جو شدید کنوارے پن کا شکار ہےپاکستان میں موجود ایک ایسا شدید کنوارا لڑکا سامنے آیا ہے جو دلہا کا لباس اور اپنے بستر پر دلہن کا لہنگا، چوڑیاں، پرس اور دیگر چیزیں رکھ کر سوتا ہے۔

لڑکے کا نام وجاہت ہے جو شدید کنوارے پن کی وجہ سے احتجاجاً دلہا کا لباس پہن کر سوتا ہے، ساتھ میں پاکستان میں موجود تمام کنواروں کو مشورہ دیتا ہے کہ وہ بھی انہیں کی طرح دلہا کا لباس پہن کر سوجایا کریں۔نجی خبررساں ادارے کو انٹرویو دیتے ہوئے وجاہت کا کہنا تھا کہ یہ میرا مطالبہ ہے اور یہ خاموش احتجاج ہے ، کنوارے دلہا کا کہنا تھا کہ وہ مسلسل 8 روز سے دلہا کا جوڑا زیب تن کیے ہوئے ہیں، اور بستر پر موجود یہ دلہن کا سامان میری دلہن ہی ہے۔وجاہت نے بتایا کہ میرا یہ احتجاج گھر والوں سے ہے، اور یہ میری شادی کی عمر ہے مگر گھر والے شادی کی خواہش نہیں بھر رہے۔انہوں نے بتایا کہ میں اپنے گھر والوں سے لڑ نہیں سکتا مگر میرا یہ مطالبہ ہے کہ جب تک میری حقیقی دلہن نہیں آئے گی میں اسی طرح اپنا احتجاج جاری رکھوں گا۔ دوسری جانب ثانیہ مرزا ملک نے پاکستان گیم شو میں براہ راست کال آنے پر سب کو حیران کردیا۔ شو میں ان کے شوہر شعیب ملک اور اداکار ہمایوں سعید مہمان تھے۔ثانیہ مرزا نے رمضان ٹرانسمیشن کے دوران پاکستانی گیم شو میں کال کر کے سب کو حیران کردیا۔ثانیہ کی کال کے پُرمزاح لمحات اے آر وائی ڈیجیٹل کی جیتو پاکستان لیگ کے دوران دیکھنے میں آئے، جہاں ثانیہ کے شوہر کرکٹرشعیب ملک اور اداکار ہمایوں سعید میزبان تھے۔شعیب کی اہلیہ اور بھارتی ٹینس اسٹار نے کال پراپنے نام کے ساتھ تعارف کروایا تاہم اس کے باوجود آغاز میں شعیب ان کی آواز کو پہچان نہیں سکے۔

About admin

Check Also

میرے دونوں ہاتھ نہیں ہیں لیکن باپ کاخواب پوراکردیا…۔معذورلڑکی جس نے ”بیٹا”بننے کے ساتھ ساتھ یونیورسٹی میں ”پوزیشن” لاکرسب کوحیران کردیا

صنعاء (نیوز ڈیسک )تعلیم کی اہمیت سب سے بڑھ کرہے ،چاہے انسان کے ساتھ کتنے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Powered by themekiller.com