Breaking News
Home / آرٹیکلز / میں گھر کا کام بھی کرتی ہوں اور ساتھ میں یوٹیوب ۔۔ جانیں اس لڑکی نے کیسے یوٹیوب کی کمائی سے گھر بنایا اور کیا مشکلات پیش آئیں؟

میں گھر کا کام بھی کرتی ہوں اور ساتھ میں یوٹیوب ۔۔ جانیں اس لڑکی نے کیسے یوٹیوب کی کمائی سے گھر بنایا اور کیا مشکلات پیش آئیں؟

سوشل میڈیا ایک ایسا پلیٹ فارم ہے جسے آج کل اکثر صارفین کمائی کا ذریعہ بنارہے ہیں۔ پاکستان میں بھی صارفین سوشل میڈیا سے پیسے کماکر اپنے اور اپنے گھر والوں کو معاشی طور پر سپورٹ کررہے ہیں۔

ایسا ہی کچھ خیر پور کی رابعہ نے کیا ہے۔
سندھ کے شہر خیر پور کے ایک چھوٹے سے گاؤں سے تعلق رکھنے والی رابعہ ناز ایک یوٹیوبر ہیں جو کہ اپنے یوٹیوب چینل کے ذریعے اپنا خود کا مکان بنارہی ہیں، جو کہ اگلے سال تک مکمل ہوجائے گا۔

خیرپور کی رابعہ ناز اپنے چینل فیشن ایڈکشن کے ذریعے کمائی کررہی ہیں، فیشن ایڈیکشن کے نام سے اس یوٹیوب چینل کے سبسکرائبرز کی تعداد ڈیڑھ لاکھ سے زائد ہے جبکہ انہیں یوٹیوب کی جانب سے سلور بٹن بھی مل چکا ہے۔ رابعہ اپنے یوٹیوب چینل پر ہر قسم کے فیشن سے متعلق ویڈیوز پوسٹ کرتی ہیں۔ چھوٹے سے گاؤں سے تعلق رکھنے والی رابعہ نے انٹرمیڈیئٹ تک تعلیم حاصل کی ہے۔

یوٹیوبر رابعہ ناز کا کہنا ہے کہ شروعات میں تو کمائی کم تھی مگراب 40 سے 50 ہزار کمالیتی ہوں۔
انٹر کے بعد رابعہ نے گھر ہی سے کمانے کا فیصلہ کیا، رابعہ کا کہنا ہے کہ کیوں نا گھر بیٹھے کوئی ایسا کام کیا جائے جو کہ فائدہ مند ہوسکتا ہے۔ رابعہ کا کہنا ہے کہ میں سب سے پہلے مخلتف ویب سائٹس دیکھتی ہوں کونسا برانڈ کس طرح کے فیشن کو ترجیح دے رہا ہے، کونسا برانڈ کچھ منفرد لارہا ہے اور کونسے ڈیزائنز آج کل فیشن میں ان ہیں۔ ان سب سے متعلق میں ویڈیوز بناتی ہوں، وائس اوور کرتی ہوں اور پھر میں ویڈیوز سافٹ وئیر پر ایڈٹ کرتی ہوں۔

تقریبا تین سے چار گھنٹے کی محنت سے میری ایک ویڈیو مکمل ہوتی ہے۔ اور پھر اسے اپلوڈ کرتی ہوں۔ رابعہ کا کہنا ہے کہ میں روزانہ ایک ویڈیو بناتی ہوں اور اپلوڈ کرتی ہوں۔
خیرپور کے اس گاؤں میں رابعہ کو انٹرنیٹ اور بجلی سے متعلق کافی مشکلات پیش آتی ہیں۔ لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے رابعہ کے کام میں خلل آتا ہے مگر وہ سنبھال لیتی ہیں۔ جبکہ رابعہ کا کہنا ہے کہ یہاں انٹرنیٹ سروس کافی خراب ہے۔ میں ویڈیو بنا لیتی ہوں اور پھر جیسے ہی انٹرنیٹ سگنلز آتے ہیں میں ویڈیو اپلوڈ کردیتی ہوں۔

خیرپور کے اس گاؤں میں خواتین کھیتی باڑی اور کاشتکاری کے شعبے سے منسلک ہیں، ایسے میں رابعہ کا ڈیجیٹل میڈیا کا استعمال کسی چمتکار سے کم نہیں۔
رابعہ کہتی ہیں کہ مجھے یوٹیوب چینل بنانے میں کافی مشکلات پیش آئیں مگر میرے گھر والوں نے میری مدد کی ہے، میرے بھائی نے مجھے ایڈیٹنگ سکھائی، جس سے میں ویڈیو ایڈٹ کرکے اپلوڈ کرسکتی ہوں۔

مرد غالب معاشرہ میں پیش آنے والی مشکلات سے متعلق رابعہ کہتی ہیں کہ خواتین کے مقابلے میں مرد صرف کام کرتے ہیں اور گھر آکر آرام کرتے ہیں۔ جبکہ ہمیں دیگر کاموں کے ساتھ ساتھ گھر کے کاموں کو بھی دیکھنا ہوتا ہے۔ میں دونوں کام بخوبی کرلیتی ہوں۔
خیرپور کی رابعہ ناز پاکستانی سماج میں ایک بہترین مثال ہیں جہاں عام طور پر لڑکیوں کو انٹرمیڈیئٹ کے بعد گھریلو کام کاج میں لگادیا جاتا ہے۔ بجلی اور انٹرنیٹ کے محدود وسائل کے باوجود وابعہ نے ہمت نہیں ہاری ہے۔ رابعہ ان تمام لوگوں کے لیے مشعل راہ ہیں جو کہ انٹرنیٹ اور بجلی کی سہولیات ہونے کے باوجود ان کا استعمال نہیں کررہے ہیں۔

Share

About admin

Check Also

’’اللہ پاک کی قدت‘‘ وہ پرندہ جو 10ماہ تک دن رات مسلسل اڑتا رہتا ہے ، وہ اس دوران اپنی خوراک کیسے پوری کرتا ہے ، جانیں

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )وہ پرندہ جو 10ماہ تک دن رات مسلسل اڑتا رہتا ہے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Powered by themekiller.com